پاکستان روس کے نئے ہتھیاروں پر نظر رکھے ہوئے ۔ خریداری متوقع

پاکستان روس کے ساتھ فوجی تعاون بڑھانا چاہتا ہے.

پاکستان روس کے نئے ہتھیاروں پر نظر رکھے ہوئے ہے تاکہ روس سے نئے اسلحے خریدنے کے بارے میں فیصلہ کرے۔ اس بارے میں روس میں پاکستان کے سفیر قاضی خلیل اللہ نے روسی خبر رساں ایجنسی “ریا نووستی” کو انٹرویو دیتے ہو‏ئے بتایا۔ ان کے بقول پچھلے چند سالوں میں روس اور پاکستان کے درمیان فوجی تعاون بڑھا ہے اور اس کے سلسلے میں دو طرفہ ملاقاتیں اکثر ہوتی رہتی ہیں۔

“ہم آگے بھی تعاون کو فروغ دینے کے خواہاں ہیں”، پاکستان کے سفیر نے کہا۔
“روسی ہتھیار دوسرے ملکوں کے ہتھیاروں کے مقابلے میں معیاری اور مؤثر ہیں۔ ہتھیار کی درآمد سے وابستہ پاکستانی سرکاری اہلکار روسی ہتھیاروں کے بارے میں اچھی رائے رکھتے ہیں۔ اسی لئے وہ نئے ہتھیاروں پر نظر رکھے ہوئے ہیں اور انہیں خریدنے کے امکانات کا جائزہ لے رہے ہیں”، قاضی خلیل اللہ نے انٹرویو میں کہا۔

یاد رہے کہ روس پاک فوجی تعاون سے متعلق معاہدے پر دستخط نومبر سن 2014 میں کئے گئے جب روس کے وزیر دفاع جنرل سرگئی شوئگو نے اسلام آباد کا دورہ کیا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں