نواب صاحب ہمیں معاف کردیں: وہ لمحہ جب رولز رائس کمپنی کے مالک کو معافی مانگنے بہاولپور آنا پڑا، نواب آف بہاولپور رولز رائس گاڑیوں کو شہر میں کس کام کے لئے استعمال کرتے تھے؟ حیران کن انکشاف

آپ یہ جان کر حیران رہ جائیں گے کہ دنیا کی مہنگی اور انتہائی خوبصورت چھ رولز رائس گاڑیاں پاکستان کے ایک علاقے کی میونسپلٹی کے زیر انتظام شہر کا کچرا اٹھانے کیلئے استعمال کی جاتی رہی ہیں۔یہ علاقہ بہاولپور تھا
اور ان گاڑیوں کی بہاولپور میونسپلٹی میں کچرا اٹھانے کیلئے شمولیت کا واقعہ نہایت دلچسپ ہے۔ قیام پاکستان سے قبل ایک بارنواب آف بہاولپور برطانیہ کے دورہ پر تھے ۔ اس دوران نواب صاحب عام شہریوں کی طرح لباس زیب تن کئے ہوئے لندن کی ایک مارکیٹ میں نکل کھڑے ہوئے۔نواب صاحب کو مارکیٹ میں رولز رائسے شوروم پر کھڑی رولز رائس گاڑی پسند آگئی، اندر گئے اور سیلز مین سے قیمت معلوم کی تو شوروم کے سیلز مین نے انہیں ایک عام ایشیائی شہری سمجھ کر ان کی خاصی بے عزتی کی اور انہیں کہا کہ ’’تم یہ گاڑی خریدنے کی حیثیت نہیں رکھتے ‘‘۔

اپنا تبصرہ بھیجیں